پولیس جب عمران خان کو گرفتار کرنے پہنچی تو سابق وزیر اعظم نے کیا کہا؟بڑا دعویٰ سامنے آ گیا

لاہور(سٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی)نے دعویٰ کیا ہے کہ گرفتاری کے موقع پر چیئرمین عمران خان نے کوئی مزاحمت نہیں کی۔

یہ بھی پڑھیں:عمران خان کی سزا اور گرفتاری،تحریک انصاف نے بڑا اعلان کر دیا
”پاکستان ٹائم“ کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کا کہنا ہے کہ ہمایوں دلاور کی کینگرو کورٹ کا فیصلہ ابھی تک عدالت کے اندر بھی کسی کو نہیں ملا تھا لیکن لاہور پولیس پہلے سے چیئرمین تحریک انصاف کو اغوا کرنے کے لیے موجود تھی،چیئرمین عمران خان نے کوئی مزاحمت نہیں کی،کیس کے شروع سے لے کر ٹرائل تک اور ٹرائل سے اغوا تک کا ہر عمل غیرقانونی ہے۔پاکستان تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ یہ سارا عمل ظاہر کرتا ہے کہ لندن پلان کے ماسٹر مائنڈ عمران خان سے کتنے خوفزدہ ہیں اور اس مضحکہ خیز ٹرائل اور اغوا کے لیے ہر غیرقانی حربہ آزمایا گیا،انشاءاللہ عمران خان اور تحریک انصاف اس امتحان میں بھی عوام کی عدالت سے سرخرو ہو کر نکلے اور قانونی جنگ بھی جیتیں گے۔

یہ بھی پڑھیں:توشہ خانہ فوجداری کیس عمران خان کو 3 سال قید،1 لاکھ جرمانہ

اپنا تبصرہ بھیجیں