لاپتہ افراد کیس،سندھ ہائی کورٹ پولیس اور دیگر اداروں پر برہم، جے آئی ٹی سربراہ طلب

کراچی(عدالتی رپورٹر)سندھ ہائی کورٹ نے لاپتہ افراد کی عدم بازیابی پر پولیس اور دیگراداروں پر برہمی کا اظہار کیا اور سربراہ صوبائی ٹاسک فورس اور جے آئی ٹی کو طلب کر لیا۔ تفصیلات کے مطابق لاپتہ افراد کی بازیابی کے لیے درخواست پرسماعت کے دوران عدالت نے صوبائی سیکریٹری داخلہ سے بھی رپورٹ طلب کر لی،جسٹس امجد علی سہتو نے کہا کہ کیوں لاپتہ افراد کے اہلخانہ کو بلا کر تنگ کر رہے ہیں، بتا دو ان کو کون لے گیا ہے اور ہم کچھ نہیں کر سکتے، ہم بھی صبح سے لکھ لکھ کر تھک گئے ہیں، 5سال سے بزرگ شہری بیٹے کے لیے چکر کاٹ رہا ہے، اگر لاپتہ شہری انتقال کر گیا ہے تو لاش دکھا دیں، سب کو سچی بات کیوں نہیں بتاتے۔ لاپتہ ہونے والے نوجوان کے والد نے عدالت کو بتایا کہ بیٹا 5سال سے قبل تھانہ شریف آباد کے علاقے سے لاپتہ ہو گیا تھا، بیمار ہوں 5سال سے عدالتوں کے چکر کاٹ رہا ہوں۔

یہ بھی پڑھیں : ”تحریک انصاف کو بھی دعوت دیں “نواز شریف کو قریبی ساتھیوں کی تجویز

اپنا تبصرہ بھیجیں