شیخ رشید کو چپیڑیں ماری گئیں، لطیف کھوسہ بھی بول پڑے

لاہور(سٹاف رپورٹر)سینئر قانون دان سردار لطیف کھوسہ نے دعوی کیا ہے کہ سابق وزیرداخلہ شیخ رشید احمد کو چپیڑیں ماری گئیں اوران کے سیل میں چوہے بھی چھوڑے گئے۔ سپریم کورٹ رجسٹری کے باہر میڈیا سے گفتگو میں لطیف کھوسہ نے لاپتا ہونے کے دوران شیخ رشید پر تشدد کیے جانے کا الزام عائد کیااور کہا کہ شیخ رشید کیا بتائے کہ مجھے چپیڑیں ماری گئیں اور منہ پر کپڑا ڈالا گیاسیل میں مکھیاں بھی تھیں۔ لطیف کھوسہ کاکہناتھاکہ عمران خان کو سائفر کیس میں جیل میں نہیں رکھا جاسکتا اور آئین پاکستانی شہریوں کو بنیادی حقوق فراہم کرتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں : شہباز شریف بیٹے سمیت عدالت میں طلب

اپنا تبصرہ بھیجیں