کراچی: دہشت گردوں کا نشانہ کیا تھا، حملہ آور دفتر کے اندر کیسے پہنچے؟ تحقیقات مکمل

پاکستان ٹائم کے ذرائع کے مطابق قانون نافذ کرنے والے اداروں کی جانب سے کراچی پولیس آفس پر حملے کی تحقیقات تیز کر دی گئیں ہیں جبکہ پولیس نے سی سی ٹی وی فوٹیج بھی حاصل کر لی ہے. اس حوالے سے پولیس نے کہا ہے کہ دہشتگردوں کا نشانہ ایڈیشنل آئی جی کراچی تھے.
ڈی آئی جی ساؤتھ عرفان بلوچ کا کہنا تھا کہ دہشتگردوں کا ٹارگٹ ایڈیشنل آئی جی کراچی تھے ، دہشتگردوں کو ایڈیشنل آئی جی کراچی کا فلور بھی معلوم تھا اور وہاں تک رسائی حاصل کرنا چاہتے تھے.
عرفان بلوچ کا مزید کہنا تھا کہ دہشتگردوں نے ایک مہینے تک مسلسل ریکی کی. اس سے قبل بھی ایڈیشنل آئی جی کراچی کے دفتر پر یہ دہشتگرد آچکے تھے۔ جب دہشت گردوں نے ریکی مکمل کرلی تو حالات سازگار پاتے ہی دفتر پر حملہ آور ہوگئے.
خیال رہے کہ دہشتگرد صدر کی طرف سے ایک گاڑی میں آئے تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں